بنگلہ دیش میں اسلام پسند رہنمائوںکو سزائیں،سراج الحق کا چوہدری نثار کو ٹیلی فون

 امیر جماعت اسلامی پاکستان سراج الحق نے وفاقہ وزیر داخلہ چوہدری نثار علی سے ٹیلی فون پر رابطہ کیا اور بنگلہ دیشن میں اسلام پسند رہنمائوں کو سزائوں بارے بات چیت کی گئی۔ سرا ج الحق نے وزیر داخلہ کو متوجہ کیا ہے کہ بنگلہ دیش حکومت اسلام پسندراہنمائوں کو سزائیں بھارت کے ایما پر دے رہی ہے ،بنگلا دیشی وزیر اعظم حسینہ واجد نے 71ء کے جن جنگی جرائم کی آڑمیں اسلامی رہنمائوں کو قید و بند اور پھانسیو ں کی سزائوں کا سلسلہ شروع کررکھا ہے،وہ سراسر غلط اور بنگلہ دیش میں بھارتی اثرو رسوخ کا نتیجہ ہیں ،حکومت پاکستان کو فوری طور پر عالمی اداروں سے رابطہ کرکے اس ظلم کو رکوانے کا فوری بندوبست کرنا چاہیے ۔ سراج الحق نے وزیر داخلہ چوہدری نثار کو یہ بھی کہاکہ 1972 ء میں پاکستان اور بنگلہ دیش کے درمیان جو معاہدے ہوئے تھے حکومت بنگلہ دیش اس کی صریح خلاف ورزی کر رہی ہے ۔ حکومت پاکستان کو ان معاہدوں کا فریق ہوتے ہوئے بنگلہ دیش کے ساتھ ساتھ عالمی برادری کے سامنے یہ مسئلہ اٹھانا چاہیے ۔وزیر داخلہ چوہدری نثار نے سراج الحق کو یقین دلایا کہ حکومت پاکستان اس مسئلہ پر نگاہ رکھے ہوئے ہے اور عنقریب وزارت خارجہ اس مسئلے کا حل پیش کرے گی ۔