Get Adobe Flash player

کوئٹہ سے جمعیت اہلحدیث بلوچستان کے نائب امیر اغوا

جمعیت اہل حدیث پاکستان کے سینئر نائب امیر اور رکن اسلامی نظریاتی کونسل مولانا علی محمد ابو تراب کو مسلح افراد نے ایئرپورٹ سے ان کے بیٹے عبدالحمید، سیکریٹری عبدالستار اور محافظ سمیت اغوا کر لیا۔مولانا علی محمد ابو تراب کومسلح افراد نے ایئرپورٹ سے ان کے بیٹے عبدالحمید، سیکریٹری عبدالستار اور محافظ سمیت اغوا کیا اور ان کی گاڑی چھوڑ گئے تاہم مرکزی جمعیت اہل حدیث کے امیر سینیٹر پروفیسر ساجد میر مرکزی اور صوبائی رہنماں جمعیت علمائے اسلام نظریاتی، مرکزی انجمن تاجران اور دیگر نے اغوا کی شدید الفاظ میں مذمت کی ہے۔پروفیسر ساجد میر نے خبردار کیا ہے کہ اگر انھیں فوری طورپر بازیاب نہیں کرایا گیا تو ملک گیر سطح پر سخت احتجاج کرینگے، انجمن تاجران نے بھی شٹر ڈان سمیت ہر قسم کے احتجاج کی دھمکی دی ہے، پروفیسر ساجد میر نے کہا کہ مولانا ابو تراب جماعت کا سرمایہ ہیں وہ ایک امن پسند اور محب وطن رہنما ہیں۔ ان کا دن دیہاڑے کوئٹہ کے حساس علاقے سے اغواسیکیورٹی فورسزکی ناکامی کا منہ بولتا ثبوت ہے، ہم حکومت بلوچستان اورفورسز سے مطالبہ کرتے ہیں کہ مولانا ابوتراب اور ان کے ساتھیوں کو فوری طور پر بازیاب کرایا جائے۔