سرگودھا میں وکلا نے خاتون اسسٹنٹ کمشنر کو یرغمال بناکر کمرے میں بند کردیا

وکلا نے خاتون اسسٹنٹ کمشنرڈاکٹرانعم کو یرغمال بنانے کے بعد ان ہی کے کمرے میں بند کردیا۔سرگودھا میں کیس مقررہ تاریخ سے پہلے سننے اورتحریری درخواست پرکارروائی نہ ہونے پر وکلا اسسٹنٹ کمشنر آفسرانعم علی خان پرخوب برس پڑے اور آفس میں توڑ پھوڑ کی۔ وکلانے خاتون اسسٹنٹ کمشنرکو کمرے میں بند کر دیا۔ واقعے کی اطلاع ملنے پر پولیس کی بھاری نفری موقع پرپہنچی تالا توڑ کراسسٹنٹ کمشنر کو کمرے سے باہر نکالا۔واقعے پر ڈاکٹر انعم کا کہنا تھا کہ وکلا ان سے اپنی مرضی کا فیصلہ چاہتے تھے لیکن انکار پر انہوں نے مجھے یرغمال بنالیا۔