Get Adobe Flash player

افغان طالبان کا غیرملکی افواج کے انخلا سے قبل آخری معرکے کا اعلان

افغان طالبان نے نیٹو فورسز کے انخلا سے قبل آخری معرکے کا اعلان کیا ہے جس میں غیر ملکی افواج سمیت اعلی سرکاری حکام کو بھی نشانہ بنایا جاسکتا ہے۔غیر ملکی میڈیا کے مطابق افغان طالبان نے اعلان کیا ہے کہ ملک بھر میں 12 مئی سے آخری معرکے کے طور پر نیٹو فورسز کے خلاف کارروائیاں کی جائیں گی اور اس دوران غیر ملکی افواج کے ساتھ افغان مترجم، سرکاری حکام، غیر ملکی باشندوں اور سیاستدانوں کو بھی نشانہ بنایا جائے گا۔افغان طالبان نے اپنی ویب سائٹ پر جاری بیان میں زور دیا ہے کہ غیر ملکی فوجی غیر مشروط طور پر انخلا کو یقینی بنائیں بصورت دیگر ان کے خلاف کارروائیاں جاری رہیں گی جبکہ کارروائیوں میں امریکی فوجی اڈوں ، غیر ملکی سفارتخانوں، قافلوں اور حکومتی اہلکاروں کو نشانہ بنایا جائے گا۔بیان میں مزید کہا گیا ہے کہ افغانستان میں غیر ملکی افواج کے خلاف جاری جدوجہد کا بہت جلد نتیجہ نکلنے والا ہے۔