Get Adobe Flash player

بھارت کے لیفٹینٹ جنرل دلبیر سنگھ سہاگ کو نیا آرمی چیف بنانے کا فیصلہ

بھارتی وزارت دفاع نے لیفٹینٹ جنرل دلبیر سنگھ سہاگ کو نیا آرمی چیف بنانے کا فیصلہ کر لیا۔ مقبوضہ کشمیر میں بے گناہ کشمیریوں کو جعلی مقابلوں میں شہید کرنے پر جنرل دلبیر سنگھ کے خلاف انکوائری بٹھائی جا چکی ہے۔ 1970 میں بھارت کی نیشنل ڈیفنس اکیڈمی کا حصہ بننے والے جنرل دلبیر سنگھ سہاگ کو موجودہ آرمی چیف جنرل بکرم سنگھ کی جگہ تعینات کیا جائے گا جو اکتیس جولائی کو ریٹائرڈ ہو جائیں گے۔ جنرل دلبیر سنگھ نے 1974 میں کمشن حاصل کیا۔ انسٹھ سالہ جنرل دلبیر سنگھ کئی سال مقبوضہ کشمیرمیں ترپن ویں انفنٹری بریگیڈ کے کمانڈر تعینات رہے۔ اس دوران انہوں نے آزادی کشمیر کی تحریک کو کچلنے کی کوشش کی لیکن ناکام رہے۔ جنرل دلبیر سنگھ کو جعلی مقابلوں میں بے گناہ کشمیریوں کو شہید کرنے پر وادی میں نفرت کی علامت سمجھا جاتا ہے۔ ان کے پیش رو آرمی چیف جنرل بکرم سنگھ نے 2012 میں جعلی مقابلوں اور بھارتی ریاست آسام میں ناکام آپریشن پر ان کے خلاف انکوائری کا حکم دیا تھا۔ بھارتی وزارت دفاع نے جنرل دلبیر سنگھ کو آرمی چیف تعینات کرنے کیلئے سفارشات حکومت کو بھجوا دی ہیں۔