شام میں خانہ جنگی کے باوجود صدارتی الیکشن کا شیڈول جاری

شام میں خانہ جنگی کے باوجود صدارتی الیکشن کا شیڈول جاری کر دیا گیا۔شام میں جاری خانہ جنگی کے باوجود صدارتی الیکشن کے لئے شیڈول جاری کر دیا گیا ہے جس کے بعد صدر بشارالاسد نے باضابطہ طور پر الیکشن مہم شروع کر دی ہے۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق شامی صدر بشار الاسد تیسری بار صدارتی الیکشن لڑ رہے ہیں۔ ان کی موجودہ مدت 17 جولائی کو ختم ہو رہی ہے۔ شام کی اعلی آئینی عدالت نے بشارالاسد سمیت 3 امیدواروں کو صدارتی انتخاب لڑنے کیلئے اہل قرار دے دیا ہے جن میں موجودہ ارکان پارلیمنٹ ماہر عبدالحفیظ حجر اور حسن عبداللہ النوری شامل ہیں۔ شامی پارلیمنٹ کا ایوان 254 ارکان پر مشتمل ہے۔ شامی آئین کے مطابق صدارتی الیکشن لڑنے والے امیدوار کو 35 ارکان کی حمایت حاصل ہونا لازمی ہے جس امیدوار کو 35 ارکان پارلیمنٹ کی حمایت حاصل نہیں ہو گی وہ صدارتی الیکشن میں حصہ نہیں لے سکتا۔ صدارتی الیکشن 3 جون کو ہو رہے ہیں۔