عراق، پارلیمانی انتخابات میں نوری المالکی کی برتری

الیکشن کمیشن کا کہنا ہے کہ اتلافِ دولتِ القانون نے پارلیمان کی 328 میں سے 92 نشستیں حاصل کی ہیںعراق کے پارلیمانی انتخابات میں ابتدائی نتائج کے مطابق ملک کے وزیر اعظم نوری المالکی اور ان کے اتحادیوں نے 92 نشستیں حاصل کی ہیں تاہم اکثریت حاصل کرنے میں ناکام رہے ہیں۔الیکشن کمیشن کا کہنا ہے کہ نوری المالکی اور اتحادیوں کا اتلافِ دولتِ القانون نامی جماعت نے پارلیمان کی 328 میں سے 92 نشستیں حاصل کی ہیں۔نوری المالکی کے مخالف دو شیعہ رہنما امر الحکیم اور مقتدی الصدر کی حمایتی جماعت احرار 57 نشستوں کے ساتھ دوسرے نمبر پر رہے۔مالکی تیسری مرتبہ وزیراعظم کے عہدے کے امیدوار ہیں تاہم ان کے مخالفین نے اس کی مخالفت کی ہے۔وزیراعظم کے مخالفین اس سال ہونے والے فرقہ وارانہ تشدد کے لیے انہیں ذمہ دار ٹھہراتے ہیں جس میں تین ہزار سے زائد افراد ہلاک ہو چکے ہیں۔ان انتخابات کے لیے سکیورٹی کے سخت انتظامات کیے گئے تھے۔ان انتخابات میں 328 پارلیمانی سیٹوں کے لیے نو ہزار سے زیادہ امیدوار میدان میں تھے۔