سمر کیمپ کی سخت مشقوں نے کرکٹرز کو دن میں تارے دکھا دیئے

لاہورکے قذافی اسٹیڈیم میں جاری سمرکیمپ کی سخت مشقوں نے کرکٹرز کو دن میں تارے دکھادیئے، 40 بار سیڑھیاں چڑھنے اترنے کے بعد کئی سینئر اور جونیئرکھلاڑیوں کی زبانیں باہر آگئیں ۔ بعض کھلاڑیوں کی رائے میں انہوں نے پاکستان کے لئے طویل عرصہ کھیلتے ہوئے اس قدر مشکل کیمپ میں شرکت نہیں کی۔اس تھکادینے والی اور مشکل ورزش میں پلیئرز کو دن میں تارے دکھادیے ۔سینئر کھلاڑیوں مصباح الحق ،شاہد آفریدی،یونس خان ،محمد حفیظ کا فٹنس لیول کمال تھا چاروں سپر فٹ نظر آئے البتہ کچھ سینئرز اورجونیئر کھلاڑیوں کی فٹنس کے بارے میں سوالات اٹھائے جارہے ہیں۔جونیئرز کی فٹنس پر زیادہ کام کرنے اور انہیں مسلسل اس فٹنس کا عادی بنانے کی ضرورت ہے۔ذرائع کا کہنا ہے کہ عمراکمل نے بنگلہ دیش سے واپسی کے بعد آرام نہیں کیا۔وہ ہیمسٹرنگ انجری سے مکمل نجات حاصل نہیں کرسکے ہیں۔جبکہ عمر اکمل کے وکٹ کیپر بھائی عدنان اکمل اور اوپنر تو فیق عمر بھی پوری طرح فٹ نہیں ہیں اور مشکل ٹریننگ سے دور ہیں۔ڈاکٹروں نے تینوں کو آرام کا مشورہ دیا ہے۔لاہور کی سخت گرمی میں کھلاڑیوں کا فٹنس لیول بڑھانے کے لئے انہیں سیڑھیوں پر چڑھایا گیا۔