انڈر19 کرکٹ صرف ریجنز تک محدود کرنے کا فیصلہ

 پاکستان کرکٹ بورڈ کے نئے پلان کے مطابق ڈپارٹمنٹل اور ریجن کی ٹیمیں ایک ساتھ فرسٹ کلاس ٹورنامنٹ کھیلیں گی۔ اس سلسلے میں انگلش فرسٹ کلاس ڈھانچے کو ماڈل بنایا گیا ہے۔ نئے ٹورنامنٹ میں ٹیموں کی خراب کارکردگی کے بعد تنزلی کردی جائے گی۔ گذشتہ سال ریجن اور ڈپارٹمنٹ کے الگ الگ ون ڈے اور فرسٹ کلاس ٹورنامنٹ ہوئے تھے۔ اس بار میچوں کی تعداد کم کرکے کوالٹی کرکٹ کو اہمیت دی جارہی ہے۔ ایک جانب پاکستان کرکٹ بورڈ نے ڈپارٹمنٹل ٹیموں کو ختم کرنے کا پلان منسوخ کردیا ہے۔ دوسری جانب ملک میں انڈر19 ڈپارٹمنٹل ٹیموں کو ختم کیا جارہا ہے۔ جبکہ نئے فرسٹ کلاس سیزن میں ڈپارٹمنٹل اور ریجنل ٹیموں کے درمیان انگلش کائونٹی کی طرز پر اے اور بی ڈویڑن لیگ کرانے کی تجویز ہے۔ امکان ہے کہ جمعے کو پاکستان کرکٹ بورڈ ڈومیسٹک کرکٹ کے بارے میں اپنی میٹنگ میں حتمی فیصلہ کرے گا۔ پی سی بی کے حد درجہ ذمے دار ذمے دار ذرائع کا کہنا ہے کہ فرسٹ کلاس ڈھانچے میں تبدیلی کا ہارون رشید کا پلان بری طرح ناکام ہوگیا۔ ظہیر عباس، اقبال قاسم ، ہارون رشید اور شکیل شیخ پر مشتمل کمیٹی نے ڈپارٹمنٹل ٹیموں کو ختم کرنے کے منصوبے کو مسترد کردیا۔