ای سی ایل سے نام نکلوانے کے لیے شاہ زیب حسن کی درخواست پر سماعت

اسپاٹ فکسنگ کیس میں معطل کرکٹر شاہ زیب حسن نے اپنا نام ایگزٹ کنٹرول لسٹ سے نکلوانے کیلیے لاہور ہائیکورٹ سے رجوع کر لیا ہے۔کرکٹر کی جانب سے دائر کی گئی درخواست پر عدالت نے 7 اگست کو وزارت داخلہ اور پی سی بی سے جواب طلب کر لیا، شاہ زیب کے وکیل نے عدالت میں موقف اختیار کیا کہ میچ فکسنگ کیس ٹریبیونل میں زیر سماعت ہے، شفاف ٹرائل کے بغیر کسی شہری کو مجرم گردانا جا سکتا اور نہ ہی خلاف قانون کارروائی کی جا سکتی ہے، میچ فکسنگ کیس ٹریبیونل میں زیر سماعت ہونے کے باوجود پی سی بی کے ایماپر وزارت داخلہ نے شاہ زیب کا نام غیر قانونی طور پر ای سی ایل میں شامل کر دیا ہے۔درخواست میں کہا گیا ہے کہ کرکٹر اپنے اہل خانہ سے ملنے کے لیے انگلینڈ جانا چاہتے ہیں اس لیے ان کا نام ای سی ایل سے خارج کرنے کا حکم دیا جائے، عدالت نے سرکاری وکیل کی جانب سے جواب جمع نہ کروانے پر برہمی کا اظہار کرتے ہوئے اگلی سماعت پر لازما جواب جمع کروانے کا حکم دیا ہے، وزارت داخلہ اور پی سی بی سے 7 اگست کو جواب طلب کر لیا۔