Get Adobe Flash player

امریکی کمپنی نے چین میں تھری ڈی پرنٹنگ خدمات شروع کر دیں

امریکی ٹیکنالوجی کمپنی ہیو لیٹ پے کارڈ انشورنس نے گذشتہ روز چین میں تھری ڈی پرنٹنگ خدمات کی فراہمی شروع کر دی ہے۔کمپنی کا کہنا ہے کہ چین میں تھری ڈی پرنٹنگ کی زبردست مانگ ہے اور اس سے چین کے مینوفیکچرنگ شعبے کو بہتر بنانے میں مددملے گی ۔ایچ پی کا کہنا ہے کہ شننگ تھری ڈی اس کے مقامی شراکت دار ہیں جو چین میں تھری ڈی پرنٹنگ ہارڈ ویئر اور سافٹ ویئر 50شہروں تک پہنچائیں گے جن میں بیجنگ ، شنگھائی ، گوانگ زو ،چینگ ڈو اور نان جنگ بھی شامل ہیں ۔مقامی حصے دار کنگ ڈائو اور سوزائو جیسے شہروں میں بھی تھری ڈی سلوشن کی پیشکش کریں گے ۔ایچ پی کا کہنا ہے کہ اسے چین میں تھری ڈی پرنٹنگ ڈیلروں کی تعداد وسیع ہو جائے گی اور کئی شہروں میں اس کی نمائشیں اور تجرباتی مراکز قائم کئے جائیں گے ، ایچ پی تھری ڈی پرنٹنگ کے نائب صدر اور جنرل منیجر رامن پاسٹر نے کہا ہے کہ چینی صنعت حکومت کے میڈان چائنا 2025 حکمت عملی کیلئے کام کررہی ہے اور تھری پرنٹنگ اس کی پیداوار بہتر بنانے ، لاگت میں کمی میں مددگار ثابت ہو گی ۔یاد رہے کہ میڈان چائنا 2025 چین کا ایک منصوبہ ہے جس کے تحت 2025 تک اپنی مینوفیکچرنگ شعبے کو ترقی دے کر بین الاقوامی معیار کے مطابق لانا چاہتا ہے ، چین میں تھری ڈی پرنٹنگ مارکیٹ میں مسلسل اضافہ ہورہاہے اور عوام اس ٹیکنالوجی کو ہر ایپ میں ٹیسٹ کررہے ہیں ، ہائوسنگ سے خوراک اور کپڑوں سے سرجری تک میں تھری ڈی پرنٹنگ سے کام لیا جارہا ہے۔