Get Adobe Flash player

گندم کی قیمت میں اضافہ، آٹے کا بحران پیدا ہونے کا خدشہ

اوپن مارکیٹ میں گندم کی قیمت پندرہ سو روپے فی من سے تجاوزکرنے کے باعث نہ صرف سرکاری خریداری ہدف خطرے میں پڑگیا،بلکہ آنیوالے دنوں میں آٹے کا بحران پیدا ہونے کا بھی خدشہ پیدا ہوگیا۔ گوجرانوالہ کی غلہ منڈیوں میں پشاور اور افغانستان کے بیوپاری منہ مانگے داموں گندم کی خریداری میں مصروف ہیں،بااثر آڑھتیوں اور مل مالکان کی ملی بھگت سے اوپن مارکیٹ میں گندم کی قیمت پندرہ سو روپے فی من سے بڑھ گئی ہے۔صارفین کا کہنا ہے کہ اسمگلنگ کو سرکاری عملے اور حکومتی اراکین اسمبلی کی آشیرباد حاصل ہے۔ گوجرانوالہ ریجن سے گندم کی سرکاری قیمت بارہ سو روپے فی من کے حساب سے سینتیس لاکھ نوے ہزار بوری خریداری کا سرکاری ہدف حاصل ہونا ممکن نہیں رہا۔ ماہرین کا کہنا ہے کہ اگر سمگلنگ کو نہ روکا گیا تو گندم کی قلت پیدا ہونے کا خطرہ ہے۔ اوپن مارکیٹ میں گندم کی بے لگام قیمتیں آنیوالے دنوں میں آٹے کو غریب کی پہنچ سے دور کرسکتی ہیں۔