گیس پائپ لائن کی تعمیر ،ایران کا پاکستان کو 2ارب ڈالرز دینے سے انکار

ایران نے پاکستانی حصے کی گیس پائپ  لائن کی تعمیر کے لیے دو ارب ڈالر کی امداد دینے سے معذرت کرلی ، عالمی امورکے نائب ایرانی وزیر علی مجیدی کا کہناہے کہ  پائپ لائن کے متعلق پاکستان کا موقف تسلیم نہیں کرتے۔ایران کی سرکاری خبر رساں ایجنسی کے مطابق عالمی امور کے نائب ایرانی وزیر علی مجیدی نے تہران میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ  گیس پائپ لائن معاہدے کے تحت ایران نے اپنا کام مکمل کرلیا۔ اب پاکستان کو اپنے حصے کی پائپ لائن تعمیرکرنی ہے۔ معاہدے کے مطابق پاکستان کو رواں سال اکتیس دسمبر سے گیس کی خریداری شروع کرنا تھی۔ انھوں نے کہا کہ پاکستان کا یہ جواز غلط ہے کہ وہ ایران پر عالمی پابندیوں کے باعث گیس پائپ لائن تعمیر نہیں کرسکتا۔ مجیدی نے کہا ایران  پاکستان کو پائپ لائن کی تعمیر کے لیے دو ارب ڈالر امداد نہیں سکتا۔