ناچ گانوں پرمبنی مخلوط رسومات کااسلام سے کوئی تعلق نہیں،عہدیداران سنی تحریک

سُنی تحریک علماء بورڈکے عہدیداروں نے کہاہے کہ ناچ گانوں پرمبنی مخلوط رسومات کااسلام سے کوئی تعلق نہیں۔غیرمحرم مردوزن کا اختلاط شرعاََناجائزاورحرام ہے۔تفریح کے نام پر اسلامی اقدارکے منافی پروگرام کسی صورت قبول نہیں کریں گے۔شعائراسلام کی تضحیک کفر اورمقدس شخصیات کاتمسخرحرام فعل ہے۔تمام میڈیامالکان کو چاہیے کہ اسلامی نظریات کو زبح کرنے کی بجائے اپنے ایمان کی حفاظت کریں۔مرکز اہلسنّت ترنول سے جاری کردہ بیان میں مفتی غفران محمودسیالوی،مفتی قاضی سعیدالرحمن،مفتی لیاقت علی رضوی،مفتی محمدعارف چشتی،مفتی شرف الدین صدیقی،صاحبزادہ خالدمحمودضیاء علامہ پیرغلام مرتضیٰ شاکر، علامہ پروفیسرکامران اسلم چشتی اورعلامہ سرفرازاحمدچشتی ودیگر عہدیداروں نے اپنے مشترکہ بیان میںکہا ہے کہ بے حیائی پھیلانے والے پروگراموں نے نوجوان نسل کو تباہ کردیاہے۔ اسلامی تہذیب اوراقدار کے منافی تمام پروگراموں پر پابندی لگائی جائے۔پیمرا اخلاقیات کے حوالے سے بنائے گئے قوانین پر عملدرآمدکرائے اورپروگراموں کی تطہیرکیلئے علماء پرمشتمل خصوصی کمیشن تشکیل دے۔ مخصوص ایجنڈے کے تحت کوریج صحافتی اصولوںکے منافی ہے۔ تنقیدبرائے تنقیدکی بجائے تنقیدبرائے اصلاح کو فروغ دیناچاہیے۔