راولپنڈی،اختیارات کاناجائز استعمال،چھ پولیس اہلکار نوکری سے فارغ

سٹی پولیس آفیسرراولپنڈی ہمایوں بشیر تارڑنے اختیارات کا ناجائز استعمال ، مقدمات میں تاخیر اور عدالتوں میں پولیس کی جانب سے غلط بیانی کرنے کے الزامات میں ملوث 1انسپکٹر،2سب انسپکٹر وں ،1ہیڈ کانسٹیبل اور 1کانسٹیبل کو انکوائری مکمل ہونے اور الزامات ثابت ہونے پر ملازمت سے برخاست کر دیا،جبکہ 1سب انسپکٹر کواے ایس آئی کے عہدہ پر تنزل کر دیا،بتایا گیا ہے کہ سی پی اوراولپنڈی نے پولیس لائن نمبر1راولپنڈی میں اردل روم کا انعقاد کیادوران اردل روم شوکاز نوٹس کی سماعت کے دوران انسپکٹر عزیز اسلم کو دوران تعیناتی بطور SHOتھانہ ائیر پورٹ مقدمہ میں ناقص تفتیش کرنے پر بعد ا ز انکوائری ڈسمس فرام سروس کیا گیا،رانا محمد اکبرSIکو مختلف الزامات پر شوکاز نوٹسسز جاری کیے گئے جس میں مقدمات کی ناقص تفتیش اور اختیارات سے تجاوز کی پاداش میں 6سال سروس ضبطگیSIسے ASIکے عہدہ پر تنزلی ،ASIسے HCکے عہدہ پر تنزلی اور ہیڈکانسٹیبل کے عہدہ پر ڈسمس فرام سروس کیا گیا ۔ تہذیب الحسن شاہ SIکو مقدمہ بجرم 302ت پ تھانہ سول لائن کی ناقص تفتیش کرنے پر ڈسمس فرام سروس کیا گیا،خان شبیر انسپکٹر کو دوران تعیناتی بطور چیف سیکورٹی آفیسر فرائض سے غفلت برتنے پر 02سال سروس ضبطگی جبکہ ہیڈکانسٹیبل عبد الطیف متعینہ سیکورٹی برانچ کو اسی الزام پر ڈسمس فرام سروس اور شہزاد کانسٹیبل نائب محرر حوالات اڈیالہ کو بھی اسی الزام کے تحت ڈسمس فرام سروس کیا گیا ، محمود احمد SIکو عدالت میں غلط بیانی کرنے پر سب انسپکٹر سے ASIکے عہدہ پر تنزل کیا گیا ۔ سمیع اللہ ASIاور کانسٹیبل منہاس حبیب کو دوران تعیناتی تھانہ ویسٹریج FIRمیں ٹیمپرنگ کرنے کی پاداش میں سزا کمی تنخواہ One Stageدی گئی ۔