Get Adobe Flash player

عمران خان کے پاس بلیک بیری نہیں ہے

شیریں مزاری کے بعد خیبرپختونخوا کی خواتین کارکن بھی میدان میں آگئیں، عائشہ گلالئی کے الزامات کی تردید کرتے ہوئے کہا سب کچھ سستی شہرت حاصل کرنے کیلئے کیا گیا، نعیمہ ناز نے کہا ایک ہفتے میں معافی نہ مانگی تو جرگہ بھیجیں گے۔عائشہ گلا لئی کے الزامات کے ردعمل میں پاکستان تحریک انصاف کی خواتین رہنماؤں نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کسی اور پارٹی میں جانے کے لیے کسی پر الزام نہیں لگانا چاہیئے، زریں ضیا نے کہا نجی ٹی وی نے اپنے پروگرام میں عائشہ گلالئی کا بھانڈا پھوڑ دیا، جس نے الزام لگائے ثابت بھی وہ ہی کریں۔پی ٹی آئی رہنما نعیمہ ناز نے کہا عمران خان کے پاس بلیک بیری نہیں ہے، پارٹی میں خواتین عائشہ گلالئی کے الزامات کی مذمت کرتی ہیں، پارٹی میں باصلاحیت ورکرز کو اوپر لے کر آیا جاتا ہے، بے بنیاد الزامات پر ہماری دل آزاری ہوئی، پرویزخٹک پر بھی بے بنیاد الزام لگائے گئے،انہوں نے کبھی پرویز خٹک کے ساتھ کام نہیں کیا، عائشہ گلالئی عمران خان سے ملاقات سے پہلے ساری چیزیں طے کر کے آئی تھیں۔نعیمہ ناز نے مزید کہا عائشہ گلالئی کا تعلق کے پی سے نہیں فاٹا سے ہے، ان سے ملاقات پر عمران خان کی نظریں نیچی تھیں، عائشہ گلالئی نے عمران خان سے این اے ون کا ٹکٹ دینے کا مطالبہ کیا، عمران خان نے کہا کہ پارلیمانی بورڈ فیصلہ کرے گا اور عائشہ گلا لئی سے شکوہ کیا کہ آپ پارٹی سرگرمیوں میں حصہ نہیں لے رہیں۔اس موقع پر زریں ضیا نے کہا کہ ہماری پارٹی میں ٹیلنٹ والے لوگوں کو آگے لایا جاتا ہے جس کی مثال یاسمین راشد ہے جو نواز شریف کی سیٹ پر الیکشن لڑ رہی ہیں ،مراد سعید اور دیگر نوجوان ارکان قومی اسمبلی ہیں۔