Get Adobe Flash player

کل بھی بے گناہ تھا آج بھی بے گناہ ہوں، سنجے دت

بالی ووڈ میں سنجو بابا کے نام سے مشہوراداکار سنجے دت کا کہنا ہے کہ وہ کل بھی بے گناہ تھے اورآج بھی بے گناہ ہیں۔بالی ووڈ کے منابھائی اداکارسنجے دت کی آسائشوں بھری زندگی میں ایک دورایسا بھی آیا تھا جسے یاد کرکے آج بھی ان کی آنکھیں جھلک پڑتی ہیں، اداکار سنجے دت 1993 میں ممبئی حملہ کیس میں سالوں جیل کی ہوا کھا چکے ہیں جس کی ناخوشگواریادیں آج بھی ان کا پیچھا نہیں چھوڑتیں انہوں نے جیل میں گزارے گئے وقت کواپنی زندگی کا دہشت ناک وقت قراردیتے ہوئے کہا کہ جیل میں گزارے گئے دنوں نے جہاں ان کی ناخوشگوار یادوں میں اضافہ کیا وہیں انہیں مضبوط اور مشکل حالات کا ڈٹ کر سامنا کرنے کے قابل بنایا انہوں نے جیل سے بہت کچھ سیکھا ہے جو زندگی گزارنے میں ان کے بہت کام آئے گا۔بھارتی میڈیا کے مطابق ایک انٹرویو میں سنجے دت نے اپنے اوپر لگنے والے تمام الزامات کو مسترد کرتے ہوئے کہا ہے کہ وہ کل بھی بے گناہ تھے اورآج بھی بے گناہ ہیں انہیں جھوٹے کیس میں پھنسایا گیا تھا ساتھ ہی انہوں نے حال ہی میں بھارتی اسکول میں بچوں کے ساتھ زیادتی اور قتل کے واقعے کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ یہ بہت خوفناک بات ہے کہ بچے اسکولوں میں بھی محفوظ نہیں ہیں، گڑگاں کیاسکول میں 5 سالہ بچی کے ساتھ زیادتی جیسے واقعے کے بعد تمام والدین کی نیندیں اڑ گئی ہیں لہذا میری گزارش ہے کہ اپنے بچوں کے حوالے سے محتاط رہیں، میں خود باپ ہوں اوراپنے بچوں کی سرگرمیوں پر کڑی نگاہ رکھتا ہوں ، انہوں نے کہا کہ اب وقت آگیا ہے کہ ہم خواتین کی عزت کرنے کے ساتھ بچوں کی حفاظت کے لیے بھی کوئی نہ کوئی قدم اٹھائیں۔