Get Adobe Flash player

سیاسی مخالفین کو وزیراعظم کی کامیابیوں کا خوف

حویلی بہادر شاہ میںبجلی گھر کی افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم نواز شریف نے کہا کہ ان کے دور میں پاکستان کے ہر شعبہ میں حقیقی معنوں میں انقلاب برپا ہو رہا ہے وہ وقت دور نہیں جب پاکستان ترقی یافتہ ممالک کی صف اول میں شامل ہوگا ملک و قوم کی خدمت کرکے اپنا فرض ادا کر رہے ہیں ہمارے سیاسی مخالفین کو یہی تکلیف ہے کہ پاکستان ترقی کی بلندیوں کو چھونے جارہاہے اور اندھیرے ختم ہو رہے ہیں انہوں نے کہا کہ بزدل الیکشن نہیں جیت سکتے اس لئے سازشیں کرتے ہیں میں انہیں کہتا ہوں کہ آئو مقابلے میں آئو جب کہو مقابلے کے لئے تیار ہیں یہ پہلے بھی الیکشن ہارے آئندہ بھی ہاریں گے مسلم لیگ (ن) نے انتخابی میدان میں انہیں بار بار شکست دی ہے آئندہ بھی دے گی وزیراعظم نے کہا کہ جے آئی ٹی کا کردار سب جانتے ہیں جس دن رپورٹ دے گی ہم اس دن داسو کی بنیاد رکھیں گے کبھی دھاندلی ' کبھی دھرنے اور کبھی احتساب کی آڑ میں سازش کی جاتی ہے کبھی وہ جے آئی ٹی کے پیچھے چھپنے کی کوشش کرتے ہیں وزیراعظم نے منصوبے کا افتتاح کرتے ہوئے انکشاف کیا کہ یہ منصوبہ 2ماہ کی ریکارڈ مدت میں مکمل ہوا ہے مختصر مدت میں بجلی کے بڑے بڑے منصوبے مکمل ہو رہے ہیں۔انہوں نے کہا کہ جب انہوں نے حکومت سنبھالی اس وقت بجلی کی پیداوار 13ہزار میگاواٹ تھی جو اب 19ہزار میگاواٹ پہنچ چکی ہے آنے والے دنوں میں اس میں مزید اضافہ کریں گے انہوں نے کہا کہ ملک میں ترقی ہو رہی ہے آنے والے سال میں اقتصادی ترقی کی شرح سات فیصد سے بڑھ جائے گی انہوں نے کہا کہ حویلی بہادر شاہ منصوبے سے 6روپے42پیسے فی یونٹ بجلی پیدا ہوگی10جولائی کو داسو پاور پلانٹ کا سنگ بنیاد رکھیں گے بھاشا ڈیم کی تعمیر بھی جلد شروع ہونے والی ہے۔اس حقیقت کو عالمی سطح پر بھی تسلیم کیاگیا ہے کہ موجودہ حکومت نے گزشتہ چار برسوں کے دوران دہشت گردی کے خاتمے' امن کی بحالی' معشیت کے ارتقاء اور توانائی بحران کے خاتمہ کے لئے غیر معمولی کارکردگی کا مظاہرہ کیا ہے جبکہ چین کے تعاون سے سی پیک منصوبوں پر تیزی سے الگ کام ہو رہا ہے۔ وزیراعظم کے سیاسی مخالفین کو یہ خوف کا حق ہے کہ اگر اس حکومت کے آگے بند  نہ باندھنے گئے اور اسنے ترقی کا یہ عمل اسی طرح جاری و ساری رکھا تو مستقبل میں ان کی سیاست ختم ہو جائے گی یا سکڑ کر رہ جائے گی چنانچہ اپنے سیاسی مستقبل کی خاطر اپوزیشن جماعتیں مملکت اور عوام کے مستقبل سے کھیل رہی ہیں جیسا کہ وزیراعظم نے کہا کہ کبھی دھرنے اور کبھی احتساب کے نام پر سازش کرتے ہیں اور کبھی جے آئی ٹی کے پیچھے چھینے کی کوشش کرتے ہیں لیکن ان سازشوں سے قطع نظر زمینی حقائق وہ ہیں جنہیں دنیا دیکھ رہی ہے اپنے پرائے سب ہی دیکھ رہے ہیں' ان حقائق کو محض الزام تراشیوںکے گردوغبار میں نہیں چھپایا جاسکتا'  پاکستان کے عوام دیکھ رہے ہیں عالمی برادری ان کا مشاہدہ کر رہی ہے عالمی مالیاتی ادارے ان پر رپورٹیں مرتب کر رہے ہیں عوام اور عالمی برادری کی یہ رپورٹیں جے آئی ٹی کی رپورٹوں سے کہیں بڑھ  کر ہیں' تاریخ گواہ ہے کہ ملک اور عوام کی خدمت کرنے والے امر ہو جاتے ہیں اور منصوعی طریقے سے انہیں منظر سے ہٹانے والے خود گمنامی کی تاریکیوں میں گم ہو جاتے ہیں۔