Get Adobe Flash player

August 2017

30 August 2017

بھارتی ریاست اترپردیش میں وبائی بخار سے 42بچے ہلاک

بھارت کی سب سے بڑی ریاست اتر پردیش کے ضلع گورکھ پور میں دماغ کے بخار کی وبا نے خوفناک صورت حال اختیار کرلی ہے اور اس کے نتیجے میں 2 روز کے دوران صرف ایک سرکاری اسپتال میں 42 بچے ہلاک ہوچکے ہیں۔بھارتی میڈیا کے مطابق اترپردیش کے ضلع گورکھ پور کے بی آرڈی میڈیکل کالج اسپتال میں 27 اور28 اگست کے دوران 42 بچے انسیفلائٹس یعنی دماغی بخار کی وجہ سے ہلاک ہوگئے ہیں جب کہ اب بھی 350 سے بچے زیر علاج ہیں، جن کی حالت بھی تشویشناک بتائی جارہی ہے۔ضلع کے سب سے بڑے اسپتال کی انتظامیہ کا کہنا ہے کہ بچوں کو بہت تشویشناک حالت میں اسپتال لایا گیا تھا اور باوجود طبی امداد فراہم کرنے کے ان کی زندگی بچانا مشکل ہو گیا تھا اور ڈاکٹر تمام تر کوششوں کے باوجود انہیں بچا نہ پائے۔ ڈاکٹروں کا کہنا ہے کہ جولائی، اگست اور ستمبر نوزائیدہ بچوں کی صحت کے حوالے سے بہت حساس ہوتے ہیں۔واضح رہے کہ رواں مہینے اسی اسپتال میں صرف 5 روز میں سو سے زائد بچے آکسیجن اور ادویات کی کمی کے باعث ہلاک ہوگئے تھے۔ ملک اور عالمی میڈیا میں اس واقعے کی خبریں شائع اور نشر ہونے پر بی جے پی ریاستی حکومت نے ذمہ داروں کے خلاف کارروائی کا اعلان کیا تھا اور اب تک کالج کے پرنسپل کو حراست میں لیا جاچکا ہے۔


Read more

پاکستان امریکا کا نہیں، ہم اس کے محتاج ہیں، سابق سی آئی اے سربراہ

امریکی سی آئی اے کے سابق سربراہ مائیکل موریل نے واضح کیا ہے کہ پاکستان امریکا کا نہیں، ہم اس کے محتاج ہیں۔ایک انٹرویو میں امریکی سی آئی اے کے سابق سربراہ مائیکل موریل نے کہا کہ امریکا کا پاکستان پر ناجائز دبا کا حربہ کارگر نہیں ہو گا البتہ اس دبا سے امریکا کو نقصان پہنچ سکتا ہے پاکستان کو نہیں کیونکہ پاکستان امریکی امداد سے آزاد ہو چکا ہے، اسے چین جیسے دوست کی امداد حاصل ہے اور امریکا پاکستان کی فضائی اور زمینی راستوں کا محتاج ہے جس کے تعاون کے بغیر یہ جنگ امریکا جیت ہی نہیں سکتا۔مائیکل موریل نے کہا کہ صدر ٹرمپ کی پالیسی واضح ہے نہ ہی انھوں نے کوئی پلان دیا ہے کہ کتنی فوج بھیجی جائے گی اور اس کا کردار کیا ہوگا۔

Read more

بے نظیر بھٹو قتل کیس کا فیصلہ محفوظ، کل سنائے جانے کا امکان

سابق وزیراعظم بے نظیر بھٹوکے قتل کیس کا فیصلہ کل سنائے جانے کا امکان ہے۔گزشتہ روز پولیس افسران کے وکلا نے مزید دلائل پیش کرتے ہوئے موقف اختیارکیا کہ بے نظیر بھٹو کو مکمل سیکیورٹی دی گئی تھی، اگر وہ گاڑی سے باہر نہ نکلتیں محفوظ رہتیں، گاڑی میں دیگر تمام قائدین مکمل طور پر محفوظ رہے تھے، گواہ نے عدالت میں بیان دیتے ہوئے بتایا کہ ناہید خان نے بے نظیر بھٹو کوگاڑی سے باہر نکل کر کارکنوں کو ہاتھ ہلانے کیلیے کہا اور ناہید خان، رزاق میرانی نے گاڑی کی چھت کا دروازہ بھی کھول کر دیا، واقعے کے بعد بے نظیر بھٹو کے زیر استعمال 2 بلیک بیری 2 سال کے بعد تفتیشی ٹیم کو دیے گئے۔ اس عرصے تک وہ کس کے زیر استعمال رہے، یہ نہیں بتایا گیا، کرائم سین تمام شواہد جمع کرکے دھویا گیا تھا۔استغاثہ نے یہ نہیں بتایا کہ کرائم سین دھونے سے ان کا کون سا ثبوت ضائع ہوا، پوسٹ مارٹم نہ کرانے کے بارے میں الزام کا جواب دیتے ہوئے انھوں نے کہا کہ بے نظیر بھٹو کی لاش کی میڈیکل رپورٹ، ڈیتھ سرٹیفکیٹ سامنے موجود ہے جس پر موت کی وجہ درج ہے، ڈاکٹرز نے بھی عدالت میں موت کی وجہ بتائی ہے۔واضح رہے کہ ملزمان رفاقت، حسنین کے وکیل ملک جواد خالد ایڈووکیٹ کا موقف تھا کہ ملزمان کو گرفتار پہلے کیا گیا، گرفتاری بعد میں ڈالی گئی، ان میں سے کسی نے اقبالی بیان نہیں دیا، یہ جبری بیان مجسٹریٹ کے سامنے تحریر کیے گئے، دونوں میں سے کوئی بھی ملزم اس سازش میں شریک نہیں، انھیں صرف قربانی کا بکرا بنایا گیا ہے، یہ مکمل بے گناہ ہیں، انھیں باعزت بری کیا جائے۔علاوہ ازیں 6 ملزمان سابق سی پی او سعود عزیز، ایس پی خرم شہزاد، شیر زمان، رفاقت، حسنین، عبدالرشید کے وکلا ملک رفیق، راجا غنیم عابر، ملک جواد خالد نے حتمی دلائل مکمل کر لیے، 7 ویں ملزم اعتزاز شاہ کے وکیل نصیر تنولی ایڈووکیٹ آج حتمی دلائل پیش کیے۔ جس کے ساتھ ہی انسداد دہشت گردی کی خصوصی عدالت کے جج محمد اصغر خان فیصلہ محفوظ کر لیا جو کل سنائے جانے کا امکان ہے۔

Read more

پاناما جے آئی ٹی کے سربراہ واجد ضیا نیب لاہورکیسامنے بطور گواہ پیش

پاناما معاملے کی تحقیقات کرنے والی جے آئی ٹی کے سربراہ واجد ضیا راولپنڈی کے بعد لاہورمیں بھی نیب حکام کے سامنے بطور گواہ پیش ہوگئے ہیں۔پاناما کیس کی تحقیقات کے لیے بنائی گئی جے آئی ٹی کے سربراہ واجد ضیا لاہور میں نیب کے اعلی حکام کے سامنے پیش ہوگئے ہیں جہاں انہوں نے بطور گواہ اپنا بیان ریکارڈ کرایا ہے۔ نیب لاہور نے واجد ضیا سے شریف خاندان اور اسحاق ڈار کے بیرو ملک اثاثوں، رقوم کی منتقلی اور دیگر امور پر سوال نامہ پہلے ہی ارسال کردیا تھا، جس کا جواب انہوں نے آج دیا ہے۔واضح رہے کہ واجد ضیا گزشتہ روز راولپنڈی میں نیب حکام کے سامنے پیش ہوئے تھے اور مختلف معاملات میں اپنا بیان ریکارڈ کرایا تھا۔


Read more

امریکا سے لڑنا نہیں چاہتے مگر لیٹنا بھی نہیں چاہتے، شاہ محمود قریشی

پاکستان تحریک انصاف کے رہنما شاہ محمود قریشی نے کہا ہے کہ افغانستان میں نئی دلی کے راستے امن نہیں آسکتا اور امریکا سے لڑنا نہیں چاہتے مگر لیٹنا بھی نہیں چاہتے۔ قومی اسمبلی میں اظہار خیال کرتے ہوئے پی ٹی آئی رہنما شاہ محمود قریشی نے کہا کہ امریکا ہمارا نان نیٹو درجہ اور مالی معاونت ختم کردے تا کہ قوم جاگ جائے، افغانستان میں امن براستہ نئی دہلی نہیں آ سکتا، ہم امریکا سے لڑنا نہیں چاہتے مگرلیٹنا بھی نہیں چاہتے۔شاہ محمود قریشی نے کہا کہ پاکستانیوں نے یک زبان ہو کر امریکی الزامات کو مسترد کیا، مشترکہ بیانیہ بنانا چاہیے اس سے مثبت پیغام جائے گا،  ہمیں ایران کے ساتھ تعلقات بہتر بنانے چاہیں، ایران جانے کی چوہدری نثار کی بات پر اتفاق کرتا ہوں، ہم بھارت سے بھی  پرامن تعلقات چاہتے ہیں لیکن وہ مذاکرات کو تیارنہیں تو پاکستان کیا کرے، کشمیر میں بھارت کی جانب سے نہتے کشمیریوں پر ظلم امریکا کو کیوں دکھائی نہیں دیتا، بھارت کے ایٹمی اسلحے میں روز بروز اضافہ امریکا کو کیوں نظر نہیں آتا۔پی ٹی آئی رہنما کا کہنا تھا کہ امریکا داعش کا خاتمہ کرنا چاہتا ہے ہمیں اختلاف نہیں، مگر امریکا کو یہ کیوں دکھائی نہیں دیتا کہ ہم بھی افغانستان اور پاکستان کی طالبانائزیشن نہیں چاہتے، امریکا کی سیکیورٹی کانفرنس میں تسلیم کیا گیا پاکستان کاایٹمی کمانڈ، کنٹرول سسٹم بے مثال ہے۔ پاکستان نے دہشت گردوں کے خلاف 7 فوجی آپریشنز کیے مگر پاکستان کی بارڈر مینجمنٹ پالیسی پر امریکا پانی پھیرتا رہا، افغانستان میں ہزاروں ایکڑ پر منشیات کاشت ہوتی ہے کیا یہ پاکستان کاشت کراتا ہے، امریکا کو افغانستان میں دہشتگردوں کی پناہ گاہیں نظر نہیں آتیں، پاکستان میں رہنیوالے لاکھوں افغان پناہ گزینوں کو دنیا کیا بھول گئی۔


Read more

عبدالباسط ریٹائرہوچکے مگرحسد کاکوئی علاج نہیں، اعزازچوہدری

امریکا میں پاکستانی سفیر اعزاز چوہدری نے سابق ہائی کمشنر عبد الباسط کے خط پر جواب دیتے ہوئے کہا کہ عبدالباسط ریٹائر ہو چکے لیکن حسد کاکوئی علاج نہیں۔امریکا میں پاکستانی سفیراعزازچوہدری نے بھارت میں سابق ہائی کمشنرعبدالباسط کے خط پر ردعمل دیتے ہوئے کہا کہ عبدالباسط کی غلط فہمی ہے کہ وہ میری وجہ سے سیکرٹری خارجہ نہ بن سکے، عبدالباسط ریٹائر ہو چکے مگر حسد کا کوئی علاج نہیں، میں نے اپنی بہترین صلاحیتوں سے ملک کی خدمت کی جب کہ میں نے چار قل اورسور فلق پڑھ کر ان کا خط نظر اندازکردیا۔اعزازچوہدری نے کہا کہ عبدالباسط سمجھنے میں ناکام رہے کہ زندگی کوشش اورقسمت کے ملاپ کا نام ہے، دوسرے پرکیچڑ اچھالنے سے کوئی فائدہ نہیں ہوسکتا، زندگی نے جو ہمیں دیا اسے عاجزی سے قبول کر لینا چاہیے اور کئی ساتھیوں نے عبدالباسط کے ناروا رویہ کے خلاف اظہار افسوس کیا۔اعزازچودہری نے مزید کہا کہ عبدالباسط کا خط بدترین اورغیر واضح ہے، عبدالباسط نے اب سوشل میڈیا کا سہارا لیا اس لئے خیالات سے آگاہ کرنا پڑا جب کہ میں نے اس خط پر کوئی ردعمل نہ دے کر معاملہ اللہ کے سپرد کردیاتھا۔واضح رہے کہ گزشتہ روزسابق ہائی کمشنرعبدالباسط کی جانب سے امریکا میں پاکستان کے سفیراعزازچوہدری کو لکھا گیا خط منظرعام پر آیا تھا جس میں انہوں نے اعزاز چوہدری کو ملک کا بدترین سیکرٹری خارجہ قرار دیا تھا۔


Read more

نوازشریف اہلیہ کی تیمارداری کے لیے لندن روانہ

سابق وزیراعظم میاں نواز شریف اپنی اہلیہ کلثوم نواز کی تیمار داری کے لیے لندن روانہ ہوگئے ہیں.سابق وزیراعظم نواز شریف پی آئی اے کی پرواز کے ذریعے لاہور سے لندن کے لیے روانہ ہوگئے ہیں، ایئرپورٹ پر انہیں وزیر اعلی پنجاب شہباز شریف نے رخصت کیا۔نواز شریف لندن میں زیر علاج اپنی اہلیہ کلثوم نواز کی تیمارداری کریں گے ، اس کے علاوہ وہ عید الاضحی بھی وہیں منائیں گے۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ سابق وزیر اعظم کی وطن واپسی کی تاریخ طے نہیں ہے تاہم وہ ایک ہفتے میں وطن واپس لوٹ آئیں گے۔واضح رہے کہ بیگم کلثوم نواز گلے کے کینسر میں مبتلا ہیں اور ان کا لندن میں علاج جاری ہے، جس کی وجہ سے این اے 120 پر ان کی انتخابی مہم مریم نواز چلارہی ہیں۔


Read more

گوشوارے جمع کرانے کی ڈیڈ لائن ختم، صرف 24سیاسی جماعتوں نے جمع کرائے

الیکشن کمیشن میں سیاسی جماعتوں کے سالانہ اثاثہ جات کی تفصیلات جمع کرانے کی ڈیڈلائن ختم ہوگئی۔ذرائع کے مطابق 345 سیاسی جماعتوں میں سے صرف 24سیاسی جماعتوں نے اپنے مالی گوشوارے الیکشن کمیشن میں جمع کرائے ہیں، الیکشن کمیشن کے مطابق گوشوارے جمع نہ کرانے والی جماعت کے انتخابی نشان 15 ستمبر کے بعد روک لیے جائیں گے، الیکشن کمیشن نے وزارت قانون کو مردم شماری کی حتمی رپورٹ جلد شائع کرنے کیلیے خط لکھ دیا ہے۔دریں اثنا الیکشن کمیشن نے پاکستان پیپلز پارٹی اور پیپلزپارٹی پارلیمنٹیرینز کے مشترکہ انتخابی نشان تیرکی الاٹمنٹ کیخلاف ناہید خان کی درخواست مسترد کر دی، این اے120 کے ضمنی الیکشن میں پیپلزپارٹی کے امیدوار فیصل میر تیر کے نشان سے الیکشن لڑ سکیں گے۔


Read more

امریکی صدر کے بیان کیخلاف قومی اسمبلی میں قرارداد متفقہ طور پر منظور

قومی اسمبلی نے امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے پاکستان مخالف دھمکی آمیز بیان کے خلاف مشترکہ قرارداد منظور کرلی۔قومی اسمبلی کے اجلاس کے دوران وزیر خزانہ خواجہ آصف نے امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے بیان اور جنوبی ایشیا سے متعلق نئی پالیسی پر مذمتی قرارداد پیش کی جسے ایوان نے متفقہ طور پر منظور کرلیا۔قرارداد میں کہا گیا ہے کہ پاکستان کی افواج نے دہشتگردی کو جڑ سے ختم کرنے کا ارادہ کیا اور قربانیاں دیں، حکومت کے موثر اقدامات کی وجہ سے ملک میں دہشتگردی کم ہوئی،امریکی جنگ سے پاکستان کی معیشت کو اربوں ڈالر کا نقصان پہنچا ، امریکی صدر ٹرمپ اور جنرل نکلسن کے بیان دھمکی آمیز ہیں، قومی اسمبلی 21 اگست کی امریکی صدر ٹرمپ کی پالیسی مسترد کرتی ہے، ایوان کوئٹہ اور پشاور میں طالبان کی موجودگی کادعوی بھی مسترد کرتا ہے۔ جنوبی ایشیاپر نئی امریکی پالیسی کو مسترد کرتے ہیں۔ پوری قوم اس وقت ایک پیج پر ہے۔ایوان نے ٹرمپ انتظامیہ کی طرف سے انڈیا کو افغانستان میں مزید کردار دینے کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ پوری پاکستانی قوم ٹرمپ پالیسی کے خلاف متحد ہے۔ قومی اسمبلی نے افغانستان میں داعش کی بڑھتی ہوئی موجودگی پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ ایوان دہشتگردی کے خلاف پاکستانی افواج کی قربانیوں کا اعتراف کرتا ہے۔قرارداد میں کہا گیا کہ پاکستان ذمے دار ایٹمی قوت ہے جو مثر کمانڈ اینڈ کنٹرول نظام رکھتا ہے، دہشت گردی کیخلاف جنگ میں 70 ہزار افراد شہید ہوئے ، پاکستان کو 123 ارب ڈالر کا نقصان ہوا، یہ قربانیاں نظر انداز کی گئیں، مسلح افواج نے جو قربانیاں دیں، جوجنگ کر رہے ہیں امریکا نے اسے بھی نظر اندازکیا۔ ایوان نے کشمیریوں کی اخلاقی اور سفارتی حمایت جاری رکھنے کا عزم کرتے ہوئے کہا کہ امریکا کی طرف سے بھارت کو بالادست قوت بنانے سے خطہ عدم استحکام سے دوچارہوگا۔

Read more

افغان جنگ پاکستان لانے کے ذمہ دار پرویز مشرف ہیں، وزیرخارجہ

وزیر خارجہ خواجہ محمد آصف نے کہا ہے کہ جنرل پرویز مشرف افغان جنگ کو پاکستان میں لانے کے ذمہ دار ہیں۔قومی اسمبلی میں امریکی پالیسی کے خلاف متفقہ قرار داد پیش کرنے کے موقع پر پالیسی بیان جاری کرتے ہوئے وزیر خارجہ خواجہ آصف نے سابق صدر کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ جنرل پرویز مشرف افغان جنگ کو پاکستان میں لے آئے، انہوں نے امریکا کو اڈے دے کر ملکی خود مختاری کو نقصان پہنچایا، جس کے نتیجے میں ہماری سالمیت و خود مختاری کو سنگین خطرات لاحق ہو گئے۔وزیر خارجہ کا کہنا تھا کہ امریکا کے ساتھ تعلقات کو 1979 سے تین حصوں میں تقسیم کیا جا سکتا ہے ، پہلا افغانستان میں روسی مداخلت، دوسرا طالبان دور اور تیسرا نائن الیون کے بعد کا دور، ہماری افواج نے ضرب عضب اور رد الفساد کے ذریعے حکومت کے مصمم ارادے کو عملی جامہ پہنچایا۔خواجہ آصف نے مزید کہا کہ پاکستان میں روایت ہے کہ فلاں ادارہ ایک پیج پر نہیں، مگر الحمداللہ آج پوری قوم میں اتفاق رائے ہے اور ایوان کی مشترکہ قرارداد پیش کر رہا ہوں۔


Read more

گزشتہ شمارے

<< < August 2017 > >>
Sun Mon Tue Wed Thu Fri Sat
    1 2 3 4 5
6 7 8 9 10 11 12
13 14 15 16 17 18 19
20 21 23 24 25 26
27 28 29 30 31