پاکستان روہنگیا مہاجرین کو پناہ دے، ملالہ یوسف زئی

نوبل انعام یافتہ ملالہ یوسف زئی نے پاکستان سمیت دیگر ممالک سے روہنگیا مسلمانوں کو پناہ دینے کا مطالبہ کیا ہے۔ملالہ یوسف زئی نے میانمار میں فوج اور انتہا پسند بدھسٹوں کی جانب سے مسلمانوں پر جاری مظالم کی سخت مذمت کرتے ہوئے کہا کہ ان کا دل غم سے چور ہے۔ ملالہ نے میانمار کی رہنما آنگ سان سوچی سے روہنگیا مسلمانوں کے ساتھ ہونے والے شرمناک سلوک کی مذمت کرنے کا مطالبہ بھی کیا۔ملالہ نے کہا کہ روہنگیا مسلمانوں پر مظالم بند کیے جائیں، میانمار کی سیکیورٹی افواج معصوم اور بے ضرر بچوں کا قتل عام کررہی ہیں، ان کے گھروں کو بھی جلا کر راکھ کا ڈھیر بنادیا گیا ہے، روہنگیا مسلمان نسلوں سے میانمار میں مقیم ہیں، اگر وہ میانمار کے شہری نہیں تو پھر کس ملک کے شہری ہیں، انہیں میانمار کی شہریت دی جائے، پاکستان سمیت دیگر ممالک دہشتگردی و مظالم کے باعث ہجرت کرنے والے روہنگیا مسلمانوں کو پناہ، خوراک اور تعلیم فراہم کریں۔ملالہ کا کہنا تھا کہ پوری دنیا اور روہنگیا مسلمان اس انتظار میں ہیں کہ سوچی اس ناروا سلوک پر بات کریں اور اس کی مذمت کریں۔ واضح رہے کہ آنگ سان سوچی جمہوریت کے لیے کوششیں کرنے کے حوالے سے نوبل امن انعام حاصل کر چکی ہیں اور میانمار میں انہیں طاقتور لیڈر تصور کیا جاتا ہے لیکن مسلمانوں پر ہونے والے مظالم پر وہ خاموش ہیں، جس پر مغربی تجزیہ کار بھی انہیں تنقید کا نشانہ بنا رہے ہیں۔