0

ذیابیطس کے مریضوں کو جلدی سونا چاہیے، تحقیق

لندن: برطانوی ماہرین کا کہنا ہے کہ ٹائپ 2 ذیابیطس کے مریضوں کو رات میں جلدی سو جانا چاہیے تاکہ ان میں یہ بیماری بہتر طور پر کنٹرول میں رہے۔یہ بات انہوں نے ذیابیطس کے 635 مریضوں کا مطالعہ کرنے کے بعد کہی، جن کی عمریں 55 سے 72 سال کے درمیان ہیں جبکہ ان میں سے بھی تقریبا ایک تہائی تعداد خواتین کی ہے۔تحقیق میں یہ بات سامنے آئی کہ ذیابیطس کے وہ مریض جو رات کو دیر سے سوتے ہیں اور صبح دیر سے اٹھتے ہیں، نہ تو انہیں ورزش کرنے کا مناسب وقت مل پاتا ہے اور نہ ہی وہ ذیابیطس کنٹرول کرنے کی دیگر احتیاطی تدابیر پر کوئی خاص توجہ دے پاتے ہیں۔نتیجہ یہ نکلتا ہے کہ ان میں ذیابیطس کی شدت بھی نسبتا کم عرصے میں بڑھ جاتی ہے اور انہیں صحت کے دوسرے کئی مسائل گھیر لیتے ہیں۔ان کے برعکس، رات کو جلدی سونے اور صبح جلدی اٹھنے والے مریضوں کے پاس ورزش کیلیے خاصا وقت ہوتا ہے جبکہ وہ ذیابیطس پر بہتر کنٹرول کیلیے ورزش سمیت مختلف سنجیدہ اقدامات کرتے ہیں۔

کیٹاگری میں : صحت

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں