0

آزادانہ خارجہ پالیسی کیلئے ڈیجیٹل ڈپلومیسی وقت کی ضرورت ہے، شاہ محمود


اسلام آباد: وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا ہے کہ ڈیجیٹل ڈپلومیسی کی ضرورت روز بروز بڑھ رہی ہے اور اس پر کام کرنا وقت کی اہم ضرورت ہے۔ وزارت خارجہ میں میڈیا سینٹر کی افتتاح تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیر خارجہ مخدوم شاہ محمود قریشی کا کہنا تھا کہ آزادانہ خارجہ پالیسی کے لیے اکنامک ڈپلومیسی کامضبوط ہونا بھی ضروری ہے اس ضمن میں ڈیجیٹل ڈپلومیسی کی ضرورت روزبروز بڑھ رہی ہے،کیوں کہ ڈیجیٹل ڈپلومیسی جدید دور کاتقاضا ہے اور وقت کی اہم ضرورت ہیں۔وزیر خارجہ نے کہا کہ ملک کی پہلی لائن آف ڈیفنس اس کی خارجہ پالیسی ہوتی ہے، دفتر خارجہ میں زیر زبر تبدیل ہونے کے اثرات پورے ملک اور خارجہ پالیسی پر ہوتے ہیں اس لئے دفتر خارجہ کے افسر کو دور اندیش اور دور بین ہونا چاہئے۔شاہ محمود قریشی کا دہشت گردی کے حوالے سے کہنا تھا کہ دنیا کو قائل کیا کہ ہم دہشت گردی سے متاثر ہوئے اور اسے شکست دی،ماضی کے مقابلے میں ہماری ذمہ داریاں بڑھ چکی ہیں، پہلے کے مقابلے میں اب پاکستان کے مخالفین کے بیانیے کا جواب بھی دیا جاتا ہے۔ یہ اس لیے بھی ضروری ہے کہ آج کے دور میں بیانیے کی کلیدی حیثیت ہے اس لئے ہم نے بھارت کے دہشت گردی کے بیانیے کو بھرپور طرح سے کاونٹر کیا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں