0

خواتین چہل قدمی کو معمول بنائیں اور بلڈ پریشر سے نجات پائیں


نیویارک: ایک نئی تحقیق سے معلوم ہوا ہے کہ جو خواتین روزانہ نصف گھنٹے پیدل چلتی ہیں وہ زائد بلڈ پریشر کے طویل عارضے کا شکار ہونے سے بچ جاتی ہیں۔ لیکن ماہرین کا اصرار ہے کہ واک باقاعدگی سے کی جائے۔ کئی ممالک میں درمیانی اور عمررسیدہ خواتین کے لیے جسمانی مشقت کا معیار اتنا رکھا گیا ہے کہ وہ 30 منٹ میں ایک میل کا سفر طے کرسکیں۔ اگر چلنے کی رفتار اس سے زائد ہو تو مزید بہتر ہوگا۔ یہ تحقیق ہائپرٹینشن نامی جرنل میں شائع ہوئی ہے۔اس مطالعے میں درمیانی عمر اور بزرگ خواتین کو شامل کیا گیا ہے جن کی عمریں 50 سے 79 برس تک ہیں۔ کل 80 ہزار خواتین کو شامل کیا گیا جو سن یاس ( مینوپاز) سے گزرچکی ہیں۔ اس رپورٹ میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ فالتو بیٹھے رہنے سے خواتین میں امراضِ قلب کے سنگین مسائل کا خطرہ بھی بڑھ جاتا ہے۔

کیٹاگری میں : صحت

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں