0

اب پیٹرولیم اور سونے کی طرح پانی کی عالمی تجارت بھی ہوگی


مین ہٹن: امریکی سرمایہ دار اداروں نے ایک نیا نظام پیش کردیا ہے جس کے تحت آئندہ چند برسوں میں پانی کی عالمی تجارت بھی اسی طرح کی جائے گی جیسے آج دنیا بھر میں پیشگی سودوں (فیوچرز کنٹریکٹس) کے ذریعے تیل اور سونے کی خرید و فروخت ہوتی ہے۔اس ضمن میں امریکی مالیاتی کمپنی سی ایم ای گروپ نے ایک معاہدہ بھی ترتیب دے دیا ہے جس کا تعلق کیلیفورنیا میں آبی فراہمی (واٹر سپلائی) کی مقامی مارکیٹ سے ہے، جس کا موجودہ تجارتی حجم 110 کروڑ ڈالر (تقریبا 175 ارب پاکستانی روپے) بتایا جاتا ہے۔واضح رہے کہ کیلیفورنیا کا شمار ماحولیاتی تبدیلی سے شدید ترین متاثرہ امریکی ریاستوں میں ہوتا ہے جہاں گزشتہ چند برسوں کے دوران اوسط درجہ میں نمایاں اضافے اور جنگلات میں آتش زدگی کی شدت بڑھنے کے علاوہ پانی کی قلت میں بھی غیرمعمولی اضافہ ہوا ہے جس نے لگ بھگ پورے کیلیفورنیا کو ایک غیر اعلانیہ صحرا میں تبدیل کردیا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں