0

حکومت سینیٹ انتخابات اوپن بیلٹ سے چاہتی ہے تو پورا پیکج لائے، سعد رفیق


لاہور: مسلم لیگ ن نے انتخابی اصلاحات کے حوالے سے لچک کا مظاہرہ کیا ہے۔ماڈل ٹاون میں پاکستان مسلم لیگ (ن) کے رہنماں کی مشترکہ پریس کانفرنس میں سعد رفیق نے کہا کہ ساتھیوں کو ڈرایا جارہا ہے، کھوکھر برادران کے گھروں کو گرادیا گیا۔ ن لیگ کے رہنماں کے نام چن چن کر کرپشن کی فہرستوں میں ڈالے جارہے ہیں۔ کرپشن کا چورن اب نہیں بکے گا۔ بزدل سرکاری اہل کار چار آنے کی نوکری کے لیے حکومت کے آلہ کار بن گئے ہیں۔خواجہ سعد رفیق نے کہا کہ کھوکھر برادران کے گھر گرانے والے ڈی ایس پی کے خلاف قانونی چارہ جوئی کریں گے۔ سیالکوٹ میں منظور شدہ اسکیم کا آفس گرادیا گیا۔ جو شخص ظلم کرے گا وہ اپنے انجام تک پہنچے گا۔ حکمراں صرف یہ چاہتے ہیں کہ مخالفین ختم ہوجائیں، ان شااللہ پی ڈی ایم اور ہم ختم نہیں ہوں گے۔سعد رفیق نے کہا آپ کرپٹ اور بزدل افسروں کو تعینات کر رہے ہیں جو افسران ظلم ہوتا دیکھ رہے ہیں وہ بھی دیانتدار نہیں رہے۔ یہ دور زیادہ دیر تک نہیں چلے گا۔ حکومت ملکی اداروں کا غلط استعمال کر رہی ہے۔ ضمنی انتخابات میں چند دن رہ گئے ہیں، تو ہمارے ساتھیوں کو ڈرایا جارہا ہے۔ جس ٹرانسپرنسی کا حوالہ دیتے نہیں تھکتے تھے اس نے اب آپ کا منہ کالا کردیا،مسلم لیگ ن اور نواز شریف کے بغض میں ملک کو تباہی کے دہانے پر لاکھڑا کیا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں