0

حکومت کو اینٹ کا جواب پتھر سے دینا جانتے ہیں، مولانا فضل الرحمان


اسلام آباد: پی ڈی ایم کے سربراہ مولانا فضل الرحمان کا کہنا ہے کہ حکومت کو اینٹ کا جواب پتھر سے دینا جانتے ہیں، تمہیں گلی کوچوں میں چلنے کی جگہ نہیں ملے گی۔سکھر میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے پی ڈی ایم کے سربراہ مولانا فضل الرحمان کا کہنا تھا کہ صدر مملکت نے جعلی وزیراعظم کی سمری پر ایوان کا جعلی اجلاس بلایا، عمران خان نے عدم اعتماد کے بعد پھر سے اعتماد کے ووٹ لینے کی بات کی ہے، ساری رات ممبر کے دروازے کھٹکھٹا کر حاضری لی گئی، ہمیں پتہ ہیہر ممبر کی نگرانی ایجنسیوں نے کی ہے اور کس طریقے سے ان سے جبری ووٹ لیا گیا ہے، وزیراعظم کو کرپٹ ارکان کا ووٹ لیتے شرم نہیں آئی، ان کی 2018 کی اکثریت بھی جعلی تھی اور اب بھی جعلی ہے، ہم نہ آج کے اجلاس کو تسلیم کرتے ہیں نہ اعتماد کے ووٹ کو تسلیم کرتے ہیں۔مولانا فضل الرحمان کا کہنا تھا کہ آج پارلیمنٹ کے باہر بدمعاشوں اور لچے لفنگوں نے شرفا کی پریس کانفرنس پر حملہ کیا، شیشے کے گھر میں رہ کر کسی پر پتھر نہیں پھینکتے، حکومت شرافت کا دامن ہاتھ نہ جانے دے، ہم حکومت کو اینٹ کا جواب پتھر سے دینا جانتے ہیں، تمہیں گلی کوچوں میں چلنے کی جگہ نہیں ملے گی۔پی ڈی ایم کے سربراہ نے کہا کہ عمران خان تو خود کرپشن کے بانی ہیں، وہ کس منہ سے ریاست مدینہ کی بات کرتے ہیں، انہوں نے خود جائیداد بنائی اور 12 لاکھ میں بنی گالا کا محل ریگولرائز کرایا، پی آئی اے کے ملازمین کو نوکری سے نکال دیا، اسٹیل مل ملازمین نے کون سی کرپشن کی جو انہیں ملازمت سے نکالا گیا، پوری دنیا سے ہماری تجارتی روابط کٹ چکے ہیں، عمران خان کبھی امریکا، کبھی ایران کے نظام کی بات کرتے ہیں، کبھی چائنا کے نظام کو آئیڈل کہتے ہیں، آپ پر اب کون اعتماد کرے گا، اب یہ قوم مزید دھوکا کھانے کو تیار نہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں