0

موٹے لوگوں پر کورونا کا حملہ زیادہ شدید ہوسکتا ہے، تحقیق


میری لینڈ: امراض سے تحفظ و تدارک کے امریکی ادارے سی ڈی سی نے خبردار کیا ہے کہ زائد وزن (اوور ویٹ) اور موٹے لوگوں پر کورونا وائرس کا حملہ زیادہ شدید اور خطرناک ہوسکتا ہے۔یہ انکشاف اس ادارے کے ماہرین نے اپنی تازہ ترین رپورٹ میں کیا ہے جس میں گزشتہ سال مارچ سے دسمبر تک کووِڈ 19 سے شدید متاثر ہوکر اسپتال میں داخل ہونے کے بعد وینٹی لیٹر پر منتقل ہونے والے 148,494 امریکی مریضوں کا جائزہ لیا گیا ہے۔مزید تفصیل کے مطابق، 18 سے 65 سال عمر کے ان مریضوں میں 28.3 فیصد زائد وزن کے حامل، جبکہ 50.8 فیصد مریض موٹاپے کا شکار تھے۔اس طرح کورونا وائرس سے شدید متاثر ہو کر اسپتال میں وینٹی لیٹر تک پہنچنے والوں کی 79.1 فیصد تعداد موٹاپے یا زائد وزنی کا شکار تھی۔بتاتے چلیں کہ بالغ افراد میں کم وزنی، صحت مند وزن، زائد وزن اور موٹاپے وغیرہ کا تعین کرنے کیلیے باڈی ماس انڈیکس (بی ایم آئی) کہلانے والا طبی پیمانہ استعمال کیا جاتا ہے۔بی ایم آئی دراصل کسی بالغ انسان کے وزن اور قد میں شرح (ratio) کو بیان کرتا ہے جسے معلوم کرنے کیلیے (پانڈ میں) وزن کو (انچ میں) قد کے مربع سے تقسیم کیا جاتا ہے۔

کیٹاگری میں : صحت

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں