0

برطانوی سائنس دانوں نے ملیریا کے خلاف موثرترین ویکسین ایجاد کرلی


لندن: امریکی سائنس دانوں نے ملیریا کے علاج میں اہم پیش رفت کرلی ہے۔ آکسفورڈ یونیورسٹی کے سائنس دانوں کا کہنا ہیکہ تجرباتی طور پر اس ویکسین کی اثر پذیری 77 فیصد تک ہے۔غیر ملکی خبر رساں ایجنسی کے مطابق آکسفورڈ یونیورسٹی کے ماہرین نے اس نئی ملیریا ویکسین R21/Matrix-M ویکسین کومغربی افریقی ملک برکینا فاسو کے 450 بچوں پر استعمال کیا گیا، جس کے حیرت انگیز نتائج سامنے نظر آئے۔ اور اس خطے میں سالانہ لاکھوں بچوں کی وجہ ہلاکت بننے والی مچھر کے کاٹنے سے ہونے والی بیماریوں میں واضح کمی دیکھنے میں آئی۔اس ویکسین کوایجاد کرنے والی ٹیم کے سربراہ ایڈریا ہل جو کہ کووڈ-19 کی آسٹرا زینیکا بنانے والی ٹیم کا حصہ تھے، کا کہنا ہے کہ تجربے کے آخری مرحلے میں ہم ساڑھے تین سال میں افریقی ممالک کے 4 ہزار800 بچوں کو ویکسینیشن کریں گے۔ انہوں نے کہا کہ اس ویکسین کے تجرباتی نتائج بہت شاندار اور توقع سیاچھے رہے ہیں۔ کیوں کہ عالمی ادارہ برائے صحت کے مطابق ویکسین کی اثرپذیری 75 فیصد ہونی چاہیے اور پہلی بار ہم نے ڈبلیو ایچ او کے مقرر کردہ معیار سے بلند نتائج دیے ہیں۔

کیٹاگری میں : صحت

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں