0

پانی میں ڈوب کر بجلی بنانے والی پتنگ


کیلیفورنیا: اگرچہ ہم ہوا میں پرواز کرنے والی پتنگوں سے بجلی بنانے کا تجربہ کرچکے ہیں لیکن عین اسی اصول پر ایک پتنگ نما پیراک آلے کا تجربہ کیا جارہا ہے جو سمندری لہروں کے بل پر بجلی تیار کرسکیگا۔اسے مینٹا سسٹمز کا نام دیا گیا ہے جو نہ صرف سمندر بلکہ دریاں کی لہروں سے بھی پانی بناسکتا ہے۔ کیلیفورنیا کے ایس آر آئی انٹرنیشنل کمپنی نے اس کا پروٹوٹائپ (اولین نمونہ) ڈیزائن کیا ہے۔ اس ضمن میں 42 لاکھ ڈالر کی رقم بھی دی گئی ہے جس کے تحت اگلے تین سال تک جامعہ کیلیفورنیا برکلے کے تعاون سے مزید تحقیق کی جائے گی۔اس پورے منصوبے کو بہت دلچسپ نام دیا گیا ہے۔ سب مرین ہائیڈروکائنٹیک اینڈ ریورائن کلومیگاواٹ سسٹمز ( شارکس) نامی یہ منصوبہ اب زوروشور سے جاری ہے۔اس کا دل و دماغ پالیمر کمپوزٹ فوم سے بنی پتنگ ہے جس کی شکل ہوبہو مینٹا رے مچھلی سے ملتی ہے۔ یہ پتنگ ایک تار سے جڑی ہوتی ہے اور اس کا اگلا سرا سمندری فرش یا دریا کے اس حصے پر کھونٹے کی طرح نصب ہوتا ہے جہاں پانی کی تیز لہریں بن رہی ہوتی ہیں۔ تار کا سرا برقی موٹر اور ایک جنریٹر سے جوڑا جاتا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں