0

سائنسی تاریخ کی انقلابی کتاب چھ کروڑ روپے میں فروخت


نیو یارک سٹی: گزشتہ ہفتے سائنسی تاریخ کی ایک اہم اور انقلابی کتاب کا 478 سال پرانا، اولین ایڈیشن 277,200 پانڈ (چھ کروڑ پاکستانی روپے) میں نیلام ہوا۔یہ کتاب سولہویں صدی عیسوی کے مشہور یورپی ماہرِ فلکیات نکولس کوپرنیکس کی تصنیف ہے جس میں پہلی بار سورج کو کائنات کا مرکز قرار دیا گیا تھا۔ اس سے پہلے زمین کو کائنات کا مرکز سمجھا جاتا تھا اور کہا جاتا تھا کہ تمام ستارے اور سیارے ہماری زمین کے گرد گھوم رہے ہیں۔لاطینی زبان میں لکھی گئی اس کتاب کا عنوان De revolutionibus orbium coelestium (آسمانی کروں کی گردش کے بارے میں) ہے اور اس کا پہلا ایڈیشن 1543 عیسوی میں، ٹھیک اسی سال شائع ہوا جب کوپرنیکس اس دنیا سے رخصت ہوا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں