0

غیر رجسٹرڈ پراپرٹی ڈیلرز، ایجنٹس، ڈویلپرز اور بلڈرز کے دفاتر پر چھاپوں کا فیصلہ


اسلام آباد: فیڈرل بورڈ آف ریونیو(ایف بی آر)کے ماتحت ادارے ڈائریکٹریٹ جنرل آف ڈی این ایف بی پیز نے فیٹف شرائط پر عمل درآمد کو یقینی بنانے کیلئے ریئل اسٹیٹ ایجنٹس، پراپرٹی ڈیلرز و ڈویلپرز اور بلڈرز کو زبردستی رجسٹرڈ کرنا شروع کردیا۔اگلے مالی سال 2021-22 کے وفاقی بجٹ کے بعد ایف بی پیز نے رجسٹرڈ نہ ہونے والے ملک بھر کے تمام ریئل اسٹیٹ، ایجنٹس، پراپرٹی ڈیلرز، ڈویلپرز اور بلڈرز کے دفاتر پر چھاپے مارنے کا فیصلہ کیا ہے۔ڈائریکٹر جنرل ڈی این ایف بی پیز نے منگل کو ریئل اسٹیٹ کنسلٹنٹ ایسوسی ایشن، ریئل اسٹیٹ ،پراپرٹی ڈیلرز و ڈویلپرز اینڈ بلڈرز ایسوسی ایشن کے نمائندوں کا اجلاس طلب کرلیا۔اس حوالے سے ریئل اسٹیٹ کنسلٹنٹ ایسوسی ایشن کے رہنما احسن ملک نے تصدیق کرتے ہوئے ایکسپریس کو بتایا کہ ریئل اسٹیٹ کنسلٹنٹ ایسوسی ایشن کا وفد کل ڈی جی ڈی این بی پیز سے ملاقات کرے گا جس میں ریئل اسٹیٹ ایجنٹس،پراپرٹی ڈیلرز و ڈویلپرز اور بلڈرز کو زبردستی رجسٹرڈ کئے جانے اور بجٹ کے بعد ان کے دفاتر کی انسپکشن کے معاملے پر گفتگو کی جائے گی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں