0

پاکستان نے کین سائنو سے پاک ویک کورونا ویکسین کی 9 لاکھ خوراکیں بنالیں


اسلام آباد: پاکستان کے نیشنل انسٹی ٹیوٹ آف ہیلتھ (این آئی ایچ) کے ماہرین نے چین سے درآمدہ کورونا ویکسین کین سائنو سے مقامی طور پر پاک ویک کی 9 لاکھ خوراکیں خود تیار کرلی ہیں۔این آئی ایچ حکام کا کہنا ہے کہ ان میں سے دو لاکھ سے زائد خوراکوں پر مشتمل ایک کھیپ ڈریپ (ڈرگ ریگولیٹری اتھارٹی آف پاکستان) کو منظوری کیلیے بھجوا دی گئی ہے۔ ڈریپ سے منظوری کے بعد یہ ویکسین شہریوں کو لگائی جائے گی۔واضح رہے کہ پاک ویک ویکسین بنانے کیلیے چین سے درآمد شدہ مرتکز (concentrated) کین سائنو ویکسین بطور خام مال استعمال کی جاتی ہے جسے کچھ مخصوص اجزا کی آمیزش کے بعد قابلِ استعمال خوراکوں (administrable doses) میں تبدیل کیا جاتا ہے۔پاک ویک ویکسین سنگل ڈوز ہے یعنی اس کی صرف ایک خوراک ہی کورونا وائرس (سارس کوو 2) سے بچا کیلیے کافی رہتی ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں