0

کے الیکٹرک اور حکومت کے درمیان ٹھن گئی


اسلام آباد: کے الیکٹرک اور حکومت کے مابین اعداد وشمار پر بحث شروع ہوگئی ہے۔ سینٹ کی قائمہ کمیٹی برائے پاور کا اجلاس چئرمین قائمہ کمیٹی سینٹر سیف اللہ ابڑو کی زیر صدارت ہوا، اجلاس میں پاور ڈویژن کے حکام نے بتایا کہ اس سال سرکلر ڈیٹ میں 260 ارب روپے کااضافہ ہوا ہے، کے الیکڑک 61 ارب روپے کی نادہندہ ہے،سینٹر طلحہ محمود کا کہنا تھا کہ سرکلر ڈیٹ سے متعلق اعدادوشمار دے کر حیرت ہورہی ہے۔ چئرمین قائمہ کمیٹی سینٹر سیف اللہ ابڑو نے کہا کہ ہم نے ایک کمپنی کی نجکاری کی ہے وہی نہیں سنبھالی جارہی، ابھی تو سننے میں آرہا ہے کہ مزید کمپنیوں کی بھی نجکاری کرنے جارہے ہیں۔ سی ای او کے الیکڑک نے جواب دیا کہ ہمارے واجبات 300 ارب روپے سے زائد ہیں، وفاقی حکومت نے ہمیں 280 روپے اداکرنے ہیں، ہم بھی واجبات کے حوالے سے ثالثی کے لئے تیار ہیں، ثالثی میں جو فیصلہ ہوگا وہ ہمیں اور حکومت کو ماننا پڑے گا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں