0

وزیراعظم اور علما کی ملاقات، فواد چوہدری اور طاہر اشرفی کو باہر نکال دیا گیا


اسلام آباد: وزیراعظم سے علما کرام کے وفد کی ملاقات کی اندرونی کہانی سامنے آگئی، علما کے اعتراض پر ایک وفاقی وزیر اور معاون خصوصی کو اٹھا دیا گیا۔ذرائع کے مطابق آج اسلام آباد میں کالعدم ٹی ایل پی کی وجہ سے پیدا ہونے والی صورت حال کا جائزہ لینے کیلیے وزیراعظم نے علما اور مشائخ سے ملاقات کی تاہم علما کرام نے وزیراعظم سے ملاقات کے دوران ایک وفاقی وزیر اور ایک معاون خصوصی کی موجودگی پر اعتراض کیا۔ علما کرام کے اعتراض پر میٹنگ سے وفاقی وزیر اطلاعات فواد چوہدری اور طاہرمحمود اشرفی کواٹھا دیا گیا۔ذرائع کا کہنا ہے کہ کالعدم تحریک لبیک کی طرف سے تجویزکیے گئے دو علما کرام کے نام بھی کمیٹی میں شامل نہیں کیے گئے، کالعدم جماعت نے مفتی منیب الرحمن اور سابق وفاقی وزیر حامد سعید کاظمی کے بھائی ارشد سعید کاظمی کوکمیٹی میں شامل کرنے کی تجویز دی تھی تاہم حکومت نے دونوں علما کے نام مسترد کردیئے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں