0

وزیراعظم سے علما کی ملاقات، سعد رضوی کو رہا کرنے سے انکار


اسلام آباد: وزیر اعظم عمران خان نے علما سے ملاقات میں سعد رضوی کو رہا کرنے سے انکار کرتے ہوئے کہا ہیکہ فرانس کے سفیر کو نکالنا ہمارے لیے نقصان دہ ہوگا۔ کالعدم ٹی ایل پی کی وجہ سے پیدا ہونے والی صورت حال پر علماو مشائخ سے ملاقات میں علما کی جانب سے وزیر اعظم کو سعد رضوی کو رہا کرنے کی تجویز دی گئی تھی جسے وزیراعظم عمران خان نے ماننے سے انکار کر دیاہے۔ اس بارے میں وزیراعظم کا کہنا ہے کہ معاملہ عدالت میں ہے، عدالت ہی فیصلہ کرے گی، میں غلط روایت نہیں ڈالوں گا، آج دبا میں آ کر چھوڑا تو کل دیگر جماعتوں کے ارکان بھی سڑکوں پر آ کر اپنے لیڈر کی رہائی کا مطالبہ کریں گے۔ذرائع کا کہنا ہے کہ علما سے ملاقات میں وزیراعظم نے فرانس کے سفیر کو نکالنے کے مطالبے سے متعلق اپنا موقف بھی پیش کیا۔ وزیر اعظم کا کہنا تھا کہ فرانس کے سفیر کو نکالنا ہمارے لیے نقصان کا باعث ہے، یورپی ممالک میں پاکستان کی ایکسپورٹ 10 ارب ڈالر ہے، ایسا مطالبہ ماننے سے یورپی ممالک کی مارکیٹ پاکستان کے لیے بند ہو جائے گی، صنعتیں، فیکٹریاں بند ہونے سے مہنگائی کا طوفان آئے گا، بیروز گاری بڑھے گی، ملک ایسی کسی صورت حال کا متحمل نہیں ہو سکتا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں