0

کاربن ڈائی آکسائیڈ انسانی تاریخ کی بلند ترین سطح پر آ گئی


واشنگٹن: کاربن ڈائی آکسائیڈ انسانی تاریخ کی بلند ترین سطح پر آگئی، سائنس دانوں کے مطابق کم از کم 40 لاکھ برس کے دوران کسی بھی وقت کے مقابلے میں اِس وقت کاربن ڈائی آکسائیڈ فضا میں سب سے زیادہ موجود ہے۔ماحول دشمن گیس کی فضا میں بڑھتی ہوئی سطح سے اس بات کا اندازہ لگایا جا سکتا ہے کہ ممالک کی جانب سے 2015 میں پیرس میں طے پائے ہدف یعنی درجہ حرارت کو 1.5 ڈگری سیلیس تک محدود کرنے کی جانب پیش رفت بہت کم کی ہے۔ماہرین کے مطابق یہی وہ حد ہے، جہاں تیزی سے ہونے والی موسمیاتی تبدیلیوں کے تباہ کن اثرات کا امکان غیر معمولی طور پر بڑھ سکتا ہے۔ امریکی ادارے نیشنل اوشین اینڈ اٹموسفیرک ایڈمنسٹریشن (این او اے اے) کے مطابق فضا میں کاربن ڈائی آکسائیڈ کی مقدار نے گزشتہ ماہ مئی میں ریکارڈ توڑ دیا کیوں کہ دنیا بھر میں پاور پلانٹس، گاڑیاں اور دیگر ذرائع فضا میں یہ ماحول دشمن گیس کی بڑی مقدارخارج کرتے رہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں