0

حالیہ ہفتے کے دوران 36 اشیائے ضروریہ کی قیمتوں میں اضافہ ہوا، ادارہ شماریات


اسلام آباد: وفاقی حکومت کی جانب سے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں ہوشربا اضافے کے بعد ملک میں مہنگائی کی شرح 3.38 فیصد کا ریکارڈ اضافہ ہوگیا۔ ملک میں پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے کے بعد سالانہ بنیادوں پر مہنگائی کی شرح 27.82 فیصد کی بلند ترین سطح پر پہنچ گئی ہے، اس دوران 36 اشیائے ضروریہ کی قیمتوں میں اضافہ، چھ کی قیمتوں میں کمی جبکہ 9 اشیا ضروریہ کی قیمتیں مستحکم رہی ہیں۔اس حوالے سے وفاقی ادارہ شماریات کی جانب سے جاری کردہ مہنگائی سے متعلق ہفتہ وار رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ گزشتہ ہفتے کے مقابلے میں مہنگائی کی شرح 3.38 فیصد زائد رہی ہے۔اعدادوشمار کے مطابق گزشتہ ہفتے کے دوران جن اشیا کی قیمتوں میں اضافہ ہوا، ان میں پیٹرول، ڈیزل، مردانہ سینڈل، چکن، آلو، بجلی چارجر، کیپسٹن چارجر، کسی بھی اوسط درجے کے ہوٹل میں دال اور بیف سالن کی پلیٹ، چائے، گھی بریڈ، ٹوائلٹ صابن، صوفی واشنگ صابن، اری 6 اور اری 9 چاول، فلپس کے انرجی سیور، دہی، مٹن، لہسن، ٹماٹر، تازہ دودھ، نیڈو پاوڈر ملک 390 گرام بیگ شامل ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں