0

تاجر برادری نے نئے حکومتی ٹیکس کو مسترد کردیا


آل پاکستان انجمن تاجران کے صدر اجمل بلوچ نے حکومت کی جانب سے نئے ٹیکس لگانے کے بیان پر سخت ردعمل دیتے ہوئے کہا ہے کہ 27 ارب کے لگائے گئے نئے ٹیکسز مسترد کرتے ہیں اور اسٹیک ہولڈرز کے ساتھ مشاورت کے بغیر لگایا گیا کوئی نیا ٹیکس قابل قبول نہیں ہے۔انہوں نے کہا کہ وزیر خزانہ کا وعدہ تھا کہ سٹیک ہولڈرز کی مشاورت کے بغیر کوئی نیا ٹیکس نہیں لگائیں گے، پہلے فکس سیل ٹیکس لگا کرتاجر برادری کو ایک ماہ خوار کیا گیا اور درآمد پر پابندی سے تاجروں اور ملک دونوں کا نقصان ہوا۔اجمل بلوچ نے کہا کہ تمباکو غریب آدمی پیتا ہیاس پر ٹیکس نہ لگایا جائے، امپورٹڈ سگریٹ پر 100 گنا ڈیوٹی لگائی جائے یہ بڑے لوگ پیتے ہیں، حکومت فیول اڑجسٹمنٹ کے نام پر لگایا گیا ٹیکس فوری واپس لے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں